پاکستان کا جوہری ہتھیار لے جانے کی صلاحیت کے حامل میزائل کا تجربہ


بیان کے مطابق اس تجربے کا مقصد اس بیلسٹک میزائل کو ڈیزائن اور تکنیکی حوالوں سے ٹیسٹ کرنا تھا

پاکستانی فوج کی جانب سے ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ پیر کے روز زمین سے زمین پر مار کرنے والے بیلسٹک میزائل شاہین سوم کا کامیاب تجربہ کیا گیا ہے۔

پاکستانی فوج کے شعبہ تعلقات عامہ آئی ایس پی آر کی جانب سے جاری کردہ ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ شاہین سوم جوہری اور روایتی وار ہیڈز لے جانے کی صلاحیت رکھتا ہے اور اس کی مار 2750 کلومیٹر ہے۔

بیان کے مطابق اس تجربے کا مقصد اس بیلسٹک میزائل کو ڈیزائن اور تکنیکی حوالوں سے ٹیسٹ کرنا تھا۔

میزائل کے اس کامیاب تجربے کو سٹریٹیجک پلان ڈویژن، سٹیریٹیجک فورسز کے اعلیٰ افسران، سائنس دانوں اور انجینیئروں نے دیکھا۔

سٹریٹیجک پلان ڈویژن کے ڈائریکٹر جنرل لیفٹیننٹ جنرل زبیر محمود حیات نے اس تجربے کو ملک کی دفاعی قابلیت کو مضبوط کرنے میں اہم قدم قرار دیا۔

یاد رہے کہ پچھلے سال نومبر میں پاکستان نے جوہری ہتھیار لے جانے کی صلاحیت کے حامل درمیانے فاصلے تک مار کرنے والے بیلیسٹک میزائل شاہین ون اے حتف فور کا کامیاب تجربہ کیا تھا۔

پاکستان فوج کے شعبہ تعلقات عامہ کے ادارے آئی ایس پی آر کے مطابق یہ میزائل 900 کلومیٹر تک ہدف کو نشانہ بنانے کی صلاحیت رکھتا ہے۔

تجربے کے وقت ماہرین کی ٹیم کے علاوہ اعلیٰ عسکری حکام بھی موجود تھے۔